2018 September 25
دوران حج صحن کعبہ میں عراقی شیعہ حاجی کا سعودی وہابی پولیس کے ہاتھوں قتل
مندرجات: ١٧١٦ تاریخ اشاعت: ٠١ September ٢٠١٨ - ١٤:٢٠ مشاہدات: 29
خبریں » پبلک
دوران حج صحن کعبہ میں عراقی شیعہ حاجی کا سعودی وہابی پولیس کے ہاتھوں قتل

شیعت نیوز: کعبتہ اللہ میں ایک عراقی شیعہ حاجی کے قتل کا واقعہ سوشل میڈیا پر موضوع بحث بنا ہوا ہے، تفصیلات کے مطابق عراق سے تعلق رکھنے والے ایک شیعہ حاجی حمید حسین الحیدری کو لبیک حسین ؑ کا نعرہ لگانے کے جرم میں قتل کردیا گیا،ایک عینی شاہد کے مطابق عراقی حجاج کا ایک گروپ صحن کعبہ میں بالائی منزل پر دعائے فرج پڑھنے میں مصروف تھا، اتنے میں سعودی پولیس اہلکارر آئے اور اس حاجی (سیدحمیدحسین الحیدری) کو مارنے لگے اور سعودی لہجے میں بولے (تمام عراقی رافضی ہیں، یہ مھدی کیا ہے) اور اسکے بعد اسےدوسری  منزل سے نیچے دھکا دے دیا ،شہید حمیدحسین کے زمین پر گرتے ہی حجاج کرام کی بڑی تعداد نے اسے گھیر لیا بعد ازاں سعودی شرطوں نے حجاج کرام کو پیچھے دھکیل کر لاش اپنے قبضے میں لے لی، عینی شاہدین کے مطابق دوسری منزل سے نیچے گرتے ہی شہید حمیدحسین کی روح جہاں فانی سے کوچ کرگئی اور اس نے بارگاہ اباعبداللہ الحسین ؑ میں حاضری دے دی ۔

واضح رہے کہ سعودی حکام عراقی حاجی حمیدحسین الحیدری کے خانہ کعبہ میں بہیمانہ قتل کے واقعے کو خودکشی قرار دے رہے ہیں ، جبکہ عراقی حجاج اور سوشل میڈیا پر فعال عراقی صارفین کے مطابق یہ واقعہ خودکشی نہیں بلکہ قتل ہے ، آل سعود شیعہ دشمنی میں کسی بھی حد تک جاسکتے ہیں ، ذکر اہل بیت ؑ اطہار وہابی سعودی حکومت اور آل سعود پر گراں گذرتاہے جسے وہ کسی صورت برداشت نہیں کرتے ۔






Share
* نام:
* ایمیل:
* رائے کا متن :
* سیکورٹی کوڈ:
  

آخری مندرجات
زیادہ زیر بحث والی
زیادہ مشاہدات والی